21

قومی اسمبلی میں پی ٹی آئی کوٹف ٹائم دینےکیلئےاپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس آج ہوگی

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں تحریک انصاف کو ٹف ٹائم دینے کے لیے متحدہ اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس (اے پی سی) آج اسلام آباد میں ہوگی، جس کے دوران سیاسی صورتحال، اپوزیشن کی طرف سے وزیراعظم، اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کے لیے مشترکہ امیدوار لانے سمیت مختلف امور پر مشاورت کی جائے گی۔

متحدہ اپوزیشن کی یہ اہم بیٹھک آج سابق اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کے گھر پر ہوگی، جس میں مسلم لیگ (ن)، پاکستان پیپلز پارٹی، متحدہ مجلس عمل اور دیگر اتحادی جماعتوں کے ارکان شرکت کریں گے۔

اجلاس میں سیاسی صورتحال، انتخابی نتائج، آئندہ کی حکمت عملی، اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کے الیکشن میں حصہ لینے اور اپوزیشن لیڈر کی نامزدگی کے فیصلے کے ساتھ ساتھ مبینہ دھاندلی پر وائٹ پیپر بھی جاری کیا جائے گا۔

فضل الرحمان ایم ایم اے کے پارلیمنٹ میں جانے پر رضا مند، گرینڈ اپوزیشن الائنس پر اتفاق

اجلاس میں بلاول بھٹو زرداری، آصف زرداری، شہباز شریف، اسفند یار ولی، محمود خان اچکزئی، حاصل بزنجو ، فضل الرحمان، سراج الحق، ساجد میر، لیاقت بلوچ، اویس نورانی، مصطفیٰ کمال، راجا ظفر الحق، سعد رفیق، خواجہ آصف، احسن اقبال، خورشید شاہ، قمر زمان کائرہ، شیری رحمان، یوسف رضا گیلانی اور پرویز اشرف بھی شرکت کریں گے ۔

اس سے قبل ہونے والی اے پی سی میں حزب اختلاف کی جماعتوں نے قومی اسمبلی میں بھرپور احتجاج کا فیصلہ کیا تھا جب کہ اپوزیشن جماعتوں کا کہنا تھا کہ عمران خان کو اتنے آرام سے وزیراعظم نہیں بننے دیں گے۔

یاد رہے کہ 30 جولائی کو مسلم لیگ (ن)، پیپلزپارٹی، عوامی نیشنل پارٹی اور متحدہ مجلس عمل کے درمیان قومی اسمبلی میں گرینڈ اپوزیشن الائنس کے قیام پر اتفاق ہوا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں