11

اداکارہ حمیمہ ملک کا ہراساں کیے جانے کا الزام

اداکارہ حمیمہ ملک نے الزام عائد کیا ہے کہ انہیں لاہور کے ایک نجی ہوٹل میں ہراساں کیا گیا۔

حمیمہ ملک نے ہراساں کرنے والے شخص کی شناخت ظاہر نہیں کی لیکن بتایا کہ ہراساں کرنے والا ہوٹل میں ان کے برابر والے کمرے میں ٹھہرا ہوا تھا۔

حمیمہ ملک نے سوشلم میڈیا پر اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ ہراساں کرنے والے شخص نے رات 2 بجے بزنس میٹنگ کی آڑ میں ملاقات کا پیغام بھیجا۔

انہوں نے بتایا کہ ہراساں کرنے والے نے مجھے کمرے میں روتے سنا تو ہمدردی جتائی اور کہا کہ آپ کے لیے فکرمند ہوں، آپ چاہیں تو ہم باہر چل سکتے ہیں۔

اداکارہ نے ہراساں کرنے والے شخص کے مکالمے بھی شئیر کیے ہیں۔

حمیمہ ملک نے لاہور کے نجی ہوٹل کی انتظامیہ کو غفلت کا مرتکب قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہوٹل انتظامیہ نے پرائیویسی پالیسی کی دھجیاں اڑاتے ہوئے جان بوجھ کر میرا نمبر ہوٹل میں ہی قیام پزیر ایک دوسرے شخص کو فراہم کیا۔

اداکارہ نے اپنے سوشل میڈیا پیغام میں لکھا کہ خاموشی توڑنے کے لیے یہ مناسب وقت ہے، تعلیم یافتہ طبقہ بھی ہراسانی کا مسئلہ معمولی سمجھ کر نظر انداز کرتا ہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل گلوکارہ میشا شفیع نے بھی ساتھی گلوکار علی ظفر پر جنسی ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں