73

مرسڈیز نہ چلنے پر عاطف اسلم رکشہ چلانے پر مجبور

نامور پاکستانی گلوکار عاطف اسلم اس وقت بینکاک میں موجود ہیں، جہاں وہ گاڑی کے بجائے رکشہ چلانے پر مجبور ہوگئے۔

پاکستان کے سب سے کامیاب گلوکار مہنگی ترین گاڑی مرسڈیز میں بیٹھے تو ضرور تاہم اس میں سفر کرنے میں ناکام رہے، کیوں کہ یہ گاڑی کسی خرابی کے باعث چل ہی نہیں پائی۔

جس کے بعد گلوکار کو کوئی دوسری گاڑی بھی نہیں ملی اور وہ رکشے میں بیٹھنے پر مجبور ہوگئے۔

لیکن اس موقع پر بھی انہیں شرمندگی کا سامنا ہی کرنا پڑا، کیوں کہ ان کے پاس اس رکشے کی چابی تک نہیں تھی۔

اس واقعے کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی، لیکن اس سے قبل کے آپ سنجیدہ ہوں ہم آپ کو بتاتے چلیں کہ یہ عاطف اسلم کا مداحوں سے کیا جانے والا ایک مذاق تھا۔

عاطف اسلم نے خود بھی اس ویڈیو کو اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس پر شیئر کیا۔

ویڈیو میں عاطف اسلم مرسڈیز سے اتر کر رکشہ میں بیٹھ گئے، تاہم انہوں نے چن اسے چلانا چاہا تو رکشے میں چابی موجود نہیں تھی۔

جس کے بعد عاطف اسلم نے اپنے دوست سے رکشے کی چابی مانگتے ہوئے کہا کہ ’چابی تو دے‘، تاہم اس موقع پر بھی انہیں شرمندگی کا سامنا ہوا کیوں کہ یہ رکشہ ’ٹک ٹک‘ تھا جسے بینکاک کی روایتی سواری کہا جاتا ہے۔

ٹک ٹاک کو چلانے کے لیے چابی کی ضرورت نہیں بلکہ یہ آٹومیٹک طریقے سے اسٹارٹ ہوتی ہے۔

واضح رہے کہ عاطف اسلم گلوکاری کے ساتھ اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس پر بھی فعال رہتے ہیں تاکہ وہ مداحوں کے ساتھ رابطے میں رہیں۔

حال ہی میں عاطف اسلم کا گانا ’12 بجے‘ بھی سامنے آیا تھا، جسے انٹرنیٹ پر خوب پسند کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں