34

ماہ رمضان کی تیاری کے طور پر شاہ عبد العزيز دروازہ کھولنے کا حکم

صدر اعلی امور مسجد حرام ومسجد نبوی شیخ ڈاکٹر عبد الرحمن بن عبد العزيز سدیس نے رمضان کی تیاری کے طور پر اصلاح ومرمت اور تعمیراتی کاموں کو جلدی ختم کرکے شاہ عبد العزیز دروازہ کھولنے کا حکم دیا، یہ کام تمام متعلقہ اداروں کے تعاون سے پورا کیا جائے.
عالی جناب نے مسجد حرام کے ادارہ برائے پروجیکٹس کو تاکید کی کہ پختہ اور عمدہ طریقہ سے کاموں کو مکمل کرنے کے لیے پوری کوشش اور زور لگایا جائے تاکہ رمضان مبارک اور اس میں ہونے والی لوگوں کی آمد اور بھیڑ کے لیے پورے طور پر تیار ہو سکے.
عالی جناب نے اپنے دورہ کے دوران اصلاح ومرمت اور تعمیراتی کاموں کا معائنہ کیا اور شاہ عبد العزيز دروازہ کس قدر تیار ہے اس کی جانکاری لی. انہوں نے امن وسلامتی کے اعلی معیارات کو بروئے کار لانے کی تاکید فرمائی تاکہ رحمن کے مہمانوں کی سلامتی کو یقینی بنایا جاسکے. نیز انہوں نے اعلی ترین خوبیوں کے استعمال اور محنت وسنجیدگی سے کام کرنے پر زور دیا تاکہ سربراہان مملکت -حفظہم اللہ- کی توقعات پایہ تکمیل کو پہنچیں اور خیر وعطا کے ویزن (ویزن 2030) کے ساتھ چل سکیں.
اس معائناتی دورہ میں عالی جناب صدر اعلی کے ہمراہ انچارج وکیل امور مسجد حرام جناب احمد بن محمد منصوری اور انچارج وکیل امور انتظامیہ جناب ڈاکٹر سعد بن محمد محیمید تھے.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ شاہ عبدالعزیز دروازہ کا شمار مسجد حرام کے کلیدی دروازوں میں ہوتا ہے اور پرانے گھر کعبہ کے قاصدین کی بڑی تعداد کا استقبال کرتا ہے. تعمیراتی کاموں کے پورے ہونے کے بعد اس کی لمبائی 48 میٹر ہوگی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں