0

بغداد حملہ کے بعد عالمی منڈی میں تیل کی قیمت میں اچانک اضافہ

عراق (ویب ڈیسک ) دارالحکومت بغدادمیں امریکی ڈرون حملے کے باعث ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد خطے میں کشیدگی سے عالمی منڈی میں تیل کی قیمتوں میں اچانک اضافہ ہو گیا ہے۔ برنیٹ کروڈ آئل کی قیمت 3 ڈالر اضافے کے ساتھ 69 اعشاریہ ایک چھ ڈالر فی بیرل ہو گئی ہے

جب کہ امریکی ویسٹ ٹیکساس انٹر میڈیٹ کروڈ آئل کی قیمت ایک اعشاریہ چھ ڈالر اضافے کے ساتھ 62 اعشاریہ نو چار بیرل ہو گئی ہے۔ 17 ستمبر 2019ء کے بعد سے تیل کی قیمتوں میں یہ سب سے زیادہ اضافہ ہے۔واضح رہے کہ جمعہ کوبغداد ایئرپورٹ پر راکٹ حملہ میں ایران

کی القدس فورس کے سینئر کمانڈر قاسم سلیمانی سمیت پانچ افرادجاں بحق ہوئے ہیں جن میں ابو مہدی المہندس بھی شامل ہیں۔پاپولر موبیلائزیشن فورس نے حملے کا الزام امریکہ پر عائدکیا ہے دوسری طرف روس نے بھی اپنے رد عمل میں امریکہ پر الزام عائد کیا ہے۔ روسی خبرایجنسی کے مطابق روس نے کہا ہے کہ امریکا نے بغداد ایئرپورٹ کے قریب دو اہداف

کو نشانہ بنایا تھا۔خود امریکہ کی جانب سے باقاعدہ اس حملے کی ذمہ داری قبول کر لی گئی ہے۔ پینٹاگون کے بیان میں کہا گیا ہے امریکی حملے میں ایران قدس فورس کے کمانڈر سلیمانی ہلاک ہو چکے ہیں. ، انہوں نے مزید کہا کہ قاسم سلیمانی عراق اور مشرق وسطی میں مستعدی طور پر امریکیوں پر حملے کرنے کے منصوبے بنا رہے تھے۔پینٹاگون نے ایک بیان

میں کہا ہے کہ “صدر کی ہدایت پر، امریکی فوج نے قاسم سلیمانی کو ہلاک کرکے بیرون ملک امریکی اہلکاروں کے تحفظ کے لئے فیصلہ کن دفاعی کارروائی کی ہے” ان کا مزید کہنا ہے کہ “اس اسٹرائیک کا مقصد آئندہ کے ایرانی حملے کے منصوبوں کی روک تھام تھا” مزید یہ کہ امریکہ پوری دنیا میں اپنے شہریوں کے مفادات کے تحفظ کے لئے ضروری کارروائیاں جاری رکھے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں