14

پٹرول کے بعد دودھ کی قیمتوں میں بھی کمی۔۔!! ڈیری فارمز کے سربراہوں نے پاکستانیوں کو بڑا سرپرائز دے ڈالا

ليکن دودھ کی قيمتوں ميں کوئی کمی نہيں ہوگی . سماء سے گفتگو ميں شاکر گجر نے کہا کہ پيٹرول کی قيمت دودھ کےنرخ پر اثرانداز نہيں ہوتی . 

انھوں نے واضح کیا کہ دودھ سستا نہيں بلکہ مزيد مہنگا ہوگا،لاک ڈاؤن اور رمضان کے احترام میں دودھ کی قیمتوں میں اضافہ نہیں کیا تھا.انھوں نے بتایا کہ دودھ کی قیمت کا انحصار بھینس کی بڑھتی ہوئی قیمت پر ہوتا ہے،قیمت میں اضافے کا فارمولا چارا اور دیگر قیمتوں کے بڑھنے پر بھی ہوتا ہے.دوسری جانب ملک میں 20 سال بعد ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت پٹرول سے کم ہوگئی، ڈیزل کی فی لیٹر قیمت 27روپے15 پیسے کمی سے 80روپے10پیسے پر آگئی، پٹرول کی فی لیٹر قیمت 15 روپے کمی سے 81 روپے 58 پیسے فی لیٹر ہوگئی. واضح رہے کہ وفاقی حکومت نے یکم مئی سے تمام پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کا اعلان کر دیا ہے.جاری کردہ نوٹیفیکیشن کے مطابق پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کل سے 30 روپے فی لیٹر تک کمی ہو جائے گی. پٹرول کی فی لیٹر قیمت میں 15 روپے، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی فی لیٹر قیمت میں 27روپے15 پیسے، لائٹ اسپیڈ ڈیزل کی فی لیٹر قیمت میں 15 روپے اور مٹی کے تیل کی فی لیٹر قیمت میں 30 روپے کمی کر دی گئی ہے. پٹرول کی نئی قیمت 81روپے58 پیسے فی لیٹر ہوگئی.

ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 27روپے15پیسے کمی کے بعد80روپے10پیسے، مٹی کا تیل 30 روپے کمی کے بعد 47 روپے فی لیٹر ہوگیا ہے. اس سے قبل آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 44 روپے 7 پیسے فی لٹر کمی کی سفارش کی تھی. اوگرا کی جانب سے ہائی سپیڈ ڈیزل پر 24 روپے 20 پیسے، پیٹرول پر 18 روپے 90 پیسے جبکہ مٹی کے تیل پر 6 روپے اور لائٹ ڈیزل پر 3 روپے فی لٹر لیوی وصول کرنے کی تجویز دی گئی تھی.اوگرا نے لائٹ ڈیزل کی قیمت میں 24 روپے 57 پیسے، مٹی کے تیل کی قیمت میں 44 روپے 7 پیسے اور ہائی سپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 33 روپے 94 پیسے فی لٹر کمی کی تجویز دی تھی. تاہم حکومت نے مشاورت کے بعد اوگرا کی سمری میں معمولی رد و بدل کے بعد پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کا نوٹیفیکیشن جاری کر دیا. بتایا گیا ہے کہ عالمی سطح پر تیل کی قیمتوں میں تاریخی گراوٹ کے باعث حکومت نے پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں بڑی کمی کا فیصلہ کیا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں