5

آصف زرداری اور بلاو ل کی پیشی، جیالوں اور پولیس میں ہاتھا پائی

آصف زرداری اور بلاو ل کی پیشی، جیالوں اور پولیس میں ہاتھا پائی، 3 کارکنان زخمی، 200گرفتار

جیالوں کی وفاقی حکومت اور شیخ رشید کے خلاف شدید نعرے بازی، وفاقی وزیر عامر کیانی کی گاڑی کو روک لیا
سینکڑوں جیالوں کی گرفتاری حکومت کی بزدلی کا ثبوت ہے، قیدی وینز پر امن جیالوں سے بھرنا کہاں کا انصاف ہے؟،پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما نیئر بخاری

اسلام آباد : اسلام آباد کا نادرا چوک میدان جنگ بن گیا، پیپلز پارٹی کارکنان اور پولیس میں ہاتھا پائی کے دوران 200 کارکنوں کو حراست میں لے لیا گیا۔ بدھ کو آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو کی نیب میں پیشی کے موقع پر نیب ہیڈ کوارٹرز جانے والے تمام راستے بند کردیے گئے

تاہم اس کے باوجود نادرا چوک پر موجود پیپلز پارٹی کے کارکنوں نے تمام رکاوٹیں ہٹا دیں اور جیالے سیکیورٹی حصار توڑتے ہوئے نیب ہیڈ کوارٹر پہنچ گئے۔پولیس نے پیپلز پارٹی کے متعدد کارکنوں کو حراست میں بھی لے لیا۔جیالوں نے وفاقی حکومت اور شیخ رشید کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور نیب دفتر کے سامنے وفاقی وزیر عامر کیانی کی گاڑی کو روک لیا۔پولیس نے جیالوں کو پیچھے دھکیلنا شروع کیا تو کارکنان مشتعل ہوئے جس پر پولیس نے پکڑ دھکڑ کرتے ہوئے 150 سے 200 کارکنوں کو گرفتار کرتے ہوئے اسلام آباد کے مختلف تھانوں میں منتقل کردیا۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما نیئر بخاری نے کہا ہے کہ سینکڑوں جیالوں کی گرفتاری حکومت کی بزدلی کا ثبوت ہے، قیدی وینز پر امن جیالوں سے بھرنا کہاں کا انصاف ہے؟ جیالے اپنی قیادت سے پرامن انداز میں اظہار یکجہتی کر رہے ہیں، حکومت اشتعال پھیلانے سے باز رہے۔ انہوں نے کہا کارکنان کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہیں، پولیس پر امن کارکنوں کی گرفتاری فوری بند کرے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں