105

کلبھوشن کو پکڑوانے میں طالبان نے پاکستان کی مدد کی

اسلام آباد (میٹرو واچ)بھارتی ایجنٹ کلبھوشن کی گرفتاری پر بات کرتے ہوئے تجزیہ نگار اوریا مقبول جان نے انکشاف کیا ہے کہ طالبان نے ہی پاکستانی خفیہ ایجنسیوں کو اس کی پاکستان کے خلاف سرگرمیوں کے بارے میں اطلاع دی تھی جس کے بعد اسے گرفتار کیا گیا . طالبان نے ہمیشہ پاکستان کے حق میں بہتر سوچا ہے .

طالبان کی افغانستان میں موجودگی کا فائدہ پاکستان کو ہی ہو گا کیونکہ انہوں نے ہمیشہ پاکستان کے فائدے کے لئے ہی سوچا ہے.یاد رہے کہ 2016 میں بھاری خفیہ ایجنسی را کے ایجنٹ کلبھوشن کو پاکستانی ایجنسی کے کارروائی کرتے ہوئے گرفتار کیا تھا جس کے بعد سے و ہ پاکستان کی حراست میں ہے.پاکستانی ایجنسیوں کو معلومات ملنے پر کارروائی کی گئی تھی جس کے مطابق کلبھوشن پاکستان میں رہتے ہوئے منصوبہ بندی کر رہا تھا جس سے وہ پاکستان کو نقصان پہنچانے والا تھا. کلبھوشن نے خود بھی اس

بات کا اعتراف کیا تھا کہ وہ پاکستان میں ہونے والے کچھ دہشت گردی کے معاملات میں ملوث تھا.اعتراف جرم کرنے کے بعد اسے حراست میں لیا گیا تھا جس کے بعد تفتیش کا سلسلہ جاری کیا گیا.طالبان اور امریکہ مذاکرات پر بات کرتے ہوئے تجزیہ نگار اوریا مقبول جان کا کہنا تھا کہ ان مذاکرات میں پاکستان نے اپنا کردار ادا کرکے ایک مثبت پیغام دیا ہے کیونکہ طالبان نے ہمیشہ پاکستان کے فائدے کے لئے کام کیا ہے.

انہوں نے ہمیشہ پاکستان کو فائدہ پہنچانا چاہا ہے.انکشاف کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ بھارتی ایجنسی را کے ایجنٹ کلبھوشن کو گرفتار کروانے میں بھی طالبان نے اپنا کردار ادا کیا تھا .طالبان نے ہی پاکستان کو کلبھوشن کی سرگرمیوں کے بارے میں اطلاع دی تھی جس کے بعد اسے گرفتار کیا گیا تھا. اس لئے ا ن کی افغانستان میں موجودگی پاکستان کے لئے نہایت مفید ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply